اگر طالبان دہشتگرد ہیں تو پھر نہرو، گاندھی بھی دہشتگرد تھے،مہتمم دارالعلوم دیوبند

دارالعلوم دیوبند کے مہتمم  مولانا ارشد مدنی نے کہا ہے کہ اگر طالبان دہشتگرد ہیں تو پھر جواہر لعل نہرو اور موہن داس گاندھی بھی دہشتگرد تھے۔

بھارتی میڈیا کو دیے گئے انٹرویو میں مولانا ارشد مدنی کا کہنا تھا کہ ہم طالبان کو جانتے ہی نہیں ہیں، وہ غلامی کو قبول نہیں کرتے۔

ان کا کہنا تھا کہ ہم کسی کو دہشت گرد نہیں کہتے اور ہم طالبان کو بھی دہشت گرد نہیں سمجھتے۔

طالبان لیڈر آپس میں لڑ پڑے، ملا برادر ناراض

مولانا ارشد مدنی نے مزید کہا کہ اگر طالبان اس بنیاد پر کہ وہ غلامی کی زنجیروں کو توڑ کر آزاد ہو رہے ہیں، اس کا نام دہشت گردی ہے تو جواہر لعل نہرو بھی دہشت گرد تھے، گاندھی بھی دہشت گرد تھے، ابو الکلام آزاد بھی دہشت گرد تھے، یہ کیا بات ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ اگر افغانستان میں ہر شخص کو امن قائم کرکے دیا جاتا ہے اور ہر آدمی کا مال، اس کی عزت و جان محفوظ ہے، اقلیت اور اکثریت کیلئے دو پیمانے نہیں ہیں ایک ہی پیمانہ ہے تو ہم کہیں گے یہ بہترین حکومت ہے۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز