دنیا بھر میں کورونا ویکسین کی 6 ارب خوراکیں لگ گئیں

کورونا ویکسین کی افادیت کم ہو جاتی ہے، تحقیق

دنیا بھر میں کورونا ویکسین کی 6 ارب خوراکیں لگ گئیں جن میں سے 40 فیصد چین میں لگائی گئی ہیں۔

غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق چین کے بعد بھارت اور امریکہ میں سب سے زیادہ افراد کو کورونا ویکسین کے انجیکشن لگ چکے ہیں اور 10 لاکھ سے زیادہ کی آبادی والے ممالک میں سے متحدہ عرب امارات اپنے شہریوں کو ویکسین لگانے میں سب سے آگے ہے۔

متحدہ عرب امارات کی 81 فیصد آبادی کو کورونا ویکسین کی مکمل خوراکیں لگ چکی ہیں۔ متحدہ عرب امارات کے بعد دوسرے نمبر پر لاطینی امریکی ملک یوراگوئے ہے جہاں ہر ایک سو شہریوں کو ویکسین کی 175 خوراکیں لگ چکی ہیں جبکہ تیسرے نمبر پر اسرائیل، چوتھے پر کیوبا اور پانچویں نمبر پر قطر ہے۔ چھٹا نمبر پرتگال کا ہے۔

اسرائیل، متحدہ عرب امارات اور یوراگوئے سمیت چند دیگر ممالک نے بھی ویکسین کے بوسٹر شاٹس لگانا شروع کر دیے ہیں تاکہ مکمل ویکسین یافتہ افراد کی قوت مدافعت میں اضافہ کیا جا سکے۔

یہ بھی پڑھیں: بھارت میں بچوں کی کوروناویکسینیشن کا آغاز اکتوبر سے ہوگا

علاوہ ازیں مغربی یورپ، شمالی امریکہ اور مشرق وسطیٰ کے چند ممالک میں ویکسین لگانے کی مہم سست روی کا شکار ہے جبکہ ایشیا، لاطینی امریکہ اور مغربی و مشرقی نصف کرہ کے ممالک میں تیزی سے شہریوں کو ویکسین لگائی جا رہی ہے۔

عالمی بینک کے مطابق اعلیٰ آمدنی والے ممالک میں ہر ایک سو شہریوں میں ویکسین کی اوسطاً 124 خوراکیں لگائی جا رہی ہیں جبکہ کم آمدنی والے ممالک میں ہر ایک سو شہریوں میں ویکسین کی چار خوراکیں لگ رہی ہیں۔

شمالی کوریا، برونڈی، ایریٹریا کا شمار ان ممالک میں ہوتا ہے جہاں ویکسین لگانے کا آغاز بالکل نہیں ہوا۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز