آزاد کشمیر قانون ساز اسمبلی کے اپوزیشن لیڈر نے گرفتاری دینے کا اعلان کردیا

آزاد کشمیر قانون ساز اسمبلی کے اپوزیشن لیڈر نے گرفتاری دینے کا اعلان کردیا

اسلام آباد: آزاد کشمیر قانون ساز اسمبلی کے اپوزیشن لیڈر نے گرفتاری دینے کا اعلان کردیا ہے۔ واضح رہے کہ چودھری یاسین کو دو نوجوانوں کے قتل میں بطور ملزم نامزد کیا گیا ہے۔ ان کے دو بیٹے بھی اسی قتل کے الزام میں گرفتار ہیں۔

آزاد کشمیر الیکشن: ن لیگ اور پیپلزپارٹی نے الزامات عائد کردیے

ہم نیوز کے مطابق اسلام آباد میں ذرائع ابلاغ سے بات چیت میں چوہدری یاسین نے گرفتاری دینے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ 25جولائی کو الیکشن میں سازش کے تحت 2 نوجوانوں کو قتل کیا گیا۔

انہوں نے الزام عائد کیا کہ مجھے اور میرے بیٹے کو مٹھی جھنڈ کیس میں نامزد کیا گیا۔ انہوں نے کہا کہ میرے دو بیٹوں کو پولیس نے قتل کے الزام میں گرفتار کیا جو جیل میں ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ آج میں قانون کی پاسداری کرتے ہوئے گرفتاری دے رہا ہوں۔

اسلام آباد میں فائرنگ، امام مسجد بیٹے اور شاگرد سمیت قتل

چوہدری یاسین نے کوٹلی اور چڑھوئی کے عوام اورپی پی قائدین کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ سیاسی زندگی کے دوران 9 الیکشنز لڑے ہیں لیکن گزشتہ دنوں ہونے والے الیکشن میرے لیے مشکل ترین تھے۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز