بھارت کا اگلا کپتان کون ہو گا؟ کوہلی نے بتا دیا

ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ میں جہاں بھارتی ٹیم کا سفر ختم ہوا، وہیں ویرات کوہلی کا ٹی 20 میں بطور کپتانی کا سفر بھی ختم ہو گیا۔

گزشتہ روز بھارت نے ورلڈ کپ کا اپنا آخری میچ نامبیا کے خلاف کھیلا اور جیت حاصل کی، لیکن پھر بھی سیمی فائنل میں جگہ نہ بنا سکے۔

ٹاس کے بعد ویرات کوہلی سے بات کی گئی تو ان کا کہنا تھا کہ  بھارتی ٹیم کی کپتانی کرنا ان کے لیے اعزاز کی بات تھی اور وہ بہت خوش قسمت ہیں کہ انہیں یہ موقع ملا، انہوں نے کہا کہ میں نے اس ذمہ داری کو پوری ایمانداری سے نبھانے کی کوشش کی تاہم اب یہ ذمہ داری کسی اور کو دینے کا وقت آگیا ہے۔

انہوں نے سوال کے جواب میں نائب کپتان روہیت شرما کا نام بھی لیا اور کہا کہ بھارت محفوظ ہاتھوں میں ہے، اور ویسے بھی روہیت شرما یہاں موجود ہیں جو تمام چیزوں کو اچھے سے دیکھ رہے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: ہم سے زیادہ کوئی مایوس کوئی نہیں ہے، ویرات کوہلی

یاد رہے ویرات کوہلی ورلڈ کپ سے پہلے ہی ٹی 20 کی کپتانی سے مستعفی ہونے کا اعلان کر چکے ہیں۔

2 ماہ قبل سوشل میڈیا سے جاری پیغام میں ویرات کوہلی کا کہنا تھا کہ گزشتہ 9 سالوں میں تینوں طرز کی کرکٹ کھیلنے اور پھر 6 سالوں کے دوران بھارتی ٹیم کی کپتانی کرنے کا دباؤ مجھے اس مقام پر لے آیا ہے جس پر سوچا ہے کہ میں خود کو اس دباو سے دور کروں اور صرف ٹیسٹ اور ون ڈے کی قیادت کروں۔

ان کا کہنا تھا کہ ٹی ٹوئنٹی کی کپتانی کے دوران میں نے اپنی بھرپور صلاحیتوں کا مظاہرہ کرنے کی کوشش کی اور بطور بلے باز میں اسے جاری رکھوں گا۔

 

متعلقہ خبریں