وزیراعظم کا اتحادیوں کو ظہرانہ

مصنوعی قلت پیدا کرنے والوں کیخلاف کارروائی ہو گی، وزیر اعظم

وزیراعظم عمران خان نے اتحادی ارکان قومی اسمبلی اور سینیٹرز کو ظہرانے پر بلایا ہے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ اتحادیوں کو مختلف قومی امور پر اعتماد میں لیا جائے گا۔

ظہرانے میں وفاقی وزرا، پی ٹی آئی اراکین اور اتحادی ارکان سمیت 150سے زائد اراکین پارلیمنٹ ظہرانے میں شریک ہیں۔ ظہرانہ وزیراعظم ہاؤس میں دیا جا رہا ہے۔

اطلاعات ہیں کہ عمران خان پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس سے قبل اتحادیوں کو انتخابی اصلاحات، لا ریفارمز، الیکٹرانک ووٹنگ اور کلبھوشن یادیو کیس سے متعلق قانون سازی اعتماد میں لیں گے۔

پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس کل ہوگا۔ وزیراعظم نے تمام ارکان کو پہلے ہی ہدایت کر رکھی ہے کہ پارلیمنٹ کے اجلاس میں حاضری یقینی بنائیں۔

خیال رہے گذشتہ روز قومی اسمبلی میں حکومت کو اپوزیشن کے ہاتھوں شکست کا سامنا کرنا پڑا ہے۔ اپوزیشن نے حکومتی شکست کو اپنی جیت سے تعبیر کیا ہے۔

ہم نیوز کے مطابق قومی اسمبلی کے ایوان میں پیش کردہ دو بلوں پر حکومت کی نسبت اپوزیشن کو زیادہ ووٹ ملے ہیں۔

چیئرمین پاکستان پیپلزپارٹی بلاول بھٹو زرداری کا حکومت کی شکست پر اپوزیشن جماعتوں کو مبارکباد پیش کرتے ہوئے کہنا تھا کہ متحدہ اپوزیشن نے آج حکومت کو قومی اسمبلی میں شکست دی ہے۔

ہم نیوز کے مطابق پاکستان مسلم لیگ (ن) کے مرکزی سیکریٹری جنرل احسن اقبال نے بھی کہا کہ حکومت کو آج قومی اسمبلی میں دوسری شکست بھی ہو گئی۔ انہوں نے کہا کہ اپوزیشن کے 127 اور حکومت کے 78 ووٹ نکلے ہیں۔

 

متعلقہ خبریں