پیٹرولیم ڈیلرز ایسوسی ایشن کی ملک بھر میں ہڑتال

پیٹرولیم ڈیلرزایسوسی ایشن  نے ملک بھرمیں ہڑتال  کردی ہے، جس سے شہریوں کو  پیٹرول کے حصول کے لیے مشکلات کا سامنا ہے۔

آج صبح 6 بجے   سےملک بھر میں  پیٹرول  پمپ بند کر دیے گئے ہیں، رپورٹ کے مطابق صرف ایمبولنس کو پیٹرول  مہیا کیا جائے گا۔ لاہور، کراچی، کوئٹہ، پشاور سمیت ملک بھر میں پیٹرول کی فراہمی روک دی گئی ہے۔

ڈیلرز ایسوسی ایشن کا کہنا ہے کہ گلگت بلتستان، آزاد کشمیر اور چترال میں بھی پیٹرول پمپس بند رہیں گے۔گزشتہ رات سے پیٹرول بھروانے کے لیے پمپس کے باہر گاڑیوں کی لمبی لائنیں لگی رہیں۔

پیٹرولیم ڈیلرز کی جانب سے کمیشن مارجن 3 سے 6 فیصد کرنے کا مطالبہ کیا جا رہا ہے، تاہم شیل پاکستان نے پیٹرول کی فراہمی جاری رکھنے کا اعلان کیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں: پیٹرولیم مصنوعات: فراہمی میں تعطل پیدا کرنیوالوں کیخلاف کارروائی کا اعلان

اعلامیہ میں کہا گیا ہے کہ کمپنی آپریٹڈ ریٹیل سائٹ سےتیل کی فراہمی جاری رہے گی۔

دوسری جانب اوگرا پٹرولیم ڈیلرز ایسوسی نے ہڑتال کا نوٹس لیتے ہوئے  پٹرول کی بلا تعطل فراہمی یقینی بنانے کی ہدایت کی ہے، جبکہ تیل سپلائی میں خلل ڈالنے والوں کے خلاف سخت کارروائی کا عندیہ بھی دیا گیا ہے۔

ترجمان اوگرا کے مطابق صورتحال کی مانیٹرنگ کے لئے ٹیمیں تشکیل دے دی ہیں۔ ڈیلرز مارجن میں اضافے سے متعلق چند عناصر پٹرول کی سپلائی میں خلل ڈالنے کی کوشش کر رہے ہیں، تیل سپلائی میں خلل ڈالنے والوں کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی۔

ترجمان وزارت پٹرولیم کے مطابق پیٹرول  پمپ ڈیلرز کے مارجن بڑھانے کے لئے کیس ای سی سی بھیجوا دیا گیا۔ آئل مارکیٹنگ کمپنیز اور ڈیلرز کے مارجن میں مناسب اضافے کے لئے وزارت کوشاں ہے۔ وفاقی کابینہ کے ذریعے سے دس روز میں فیصلے کا امکان ہے۔

 

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز