تیل سے بھرا روسی بحری جہاز سمندر میں روک لیا گیا

یونان نے تیل سے بھرا روسی بحری جہاز سمندر میں روک لیا۔

یونانی حکام نے روس کے خلاف یورپی یونین کی عائد کردہ پابندیوں کے تحت ایک روسی آئل ٹینکر کو بحیرہ ایجیئن میں روک لیا ہے۔

یونانی کوسٹ گارڈز کے مطابق  بحری آئل ٹینکر کو 15 اپریل کوروکا گیا۔ اس بحری جہاز پر روسی پرچم لگا ہوا ہے اور اس کا  نام پیگاس ہے۔

یہ بھی پڑھیں:یوکرینی مہاجرین نے واپس وطن لوٹنا شروع کر دیا

مال بردار بحری جہاز پر  روسی عملے کے19 ارکان بھی سوار ہیں اور اس وقت یہ ٹینکر یونانی جزیرے ایویا کے ساحل کے قریب خلیج کارِسٹوس میں لنگر انداز ہے۔

یاد رہے کہ  یوکرین پر  روسی فوجی حملے کے بعد یورپی یونین نے روس کے خلاف سخت پابندیاں عائد کی تھیں۔

ان  پابندیوں  میں مختلف سامان کی درآمد اور برآمد کے علاوہ روسی پرچم والے بحری جہازوں کی یورپی یونین کی بندرگاہوں تک رسائی پر پابندی بھی شامل ہے۔

متعلقہ خبریں