نیب کا بنیادی مقصد کرپشن کا خاتمہ ہے، وفاداریاں ریاست کیلئے ہیں، چیئرمین نیب

لاہور: چیئرمین نیب جسٹس ریٹائرڈ جاوید اقبال نے کہا ہے کہ نیب کا بنیادی مقصد کرپشن کا خاتمہ ہے اور ہاتھوں میں کشکول کی بڑی وجہ بھی کرپشن ہے۔

چیئرمین قومی احتساب بیورو (نیب) جسٹس ریٹائرڈ جاوید اقبال نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ جن کے ساتھ زیادتی ہوئی انہیں حق واپس دلایا جائے اور 100 سوسائٹیز اگر کام کر رہی ہیں تو ان میں سے 86 فیصد فراڈ ہے۔

انہوں نے کہا کہ حکومت اور ریاست میں فرق ہے اور نیب کی تمام وفاداریاں ریاست پاکستان کے لیے ہیں، نیب کا بنیادی مقصد کرپشن کا خاتمہ ہے اور ہمارے ہاتھوں میں کشکول کی بڑی وجہ بھی کرپشن ہے۔

یہ بھی پڑھیں: معیشت کے قاتل آج مظلوم بننے کا ناٹک کر رہے ہیں، وزیر داخلہ

جسٹس (ر) جاوید اقبال نے کہا کہ ایک صاحب نے کہا یہ ریکوری کدھر چلی گئی اور نیب الماری نہیں جہاں پیسے پڑے ہیں بلکہ 50 ارب سے زیادہ لوگوں میں تقسیم کیے جا چکے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ یہ لوگوں کی امانتیں ہیں اور ہم اس کے ضامن ہیں جبکہ ہماری ہمیشہ کوشش رہی کہ لوگوں کی عزت نفس کو ٹھیس نہ پہنچے۔ قانون بنانا نیب کا کام نہیں بلکہ نیب واحد ادارہ ہے جس کا مکمل آڈٹ ہو چکا ہے۔

چیئرمین نیب نے کہا کہ اختیارات کے استعمال میں رب کے سامنے جواب دہ ہیں، نیب نے 4 سال میں ایک ہزار 363 ارب روپے سے زائد کی ریکوری کی۔

متعلقہ خبریں