وزیراعلیٰ پنجاب کا الیکشن کل ہوا تو بحران بڑھے گا، سپریم کورٹ حکم امتناع جاری کرے، عمران خان کی اپیل

اسلام آباد: چیئرمین پاکستان تحریک انصاف عمران خان نے خبردار کرتے ہوئے کہا ہے کہ اگر کل وزیراعلیٰ کا  الیکشن ہوتا ہے تو اس سے بحران مزید بڑھے گا، سپریم کورٹ سے اپیل کرتا ہوں وہ اس الیکشن پر حکم امتناع جاری کرے۔

عمران خان دور کی کرپشن سامنے لانے کیلئے کمیشن بنانے کا فیصلہ

ہم نیوز کے مطابق انہوں نے یہ اپیل جاری کردہ ایک ویڈیو بیان میں کی ہے۔ انہوں نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ حمزہ شہباز کا وزیراعلیٰ کا الیکشن غیر آئینی تھا، حمزہ شہباز کو کوئی حق نہیں تھا پنجاب کا وزیراعلیٰ بننے کا، فیصلے میں کچھ چیزوں کی وضاحت درکار ہے، اگر وضاحت نہ آئی تو پنجاب میں آئینی بحران بڑھتا جائے گا۔

سابق وزیراعظم نے استفسار کیا کہ اگر الیکشن غیر آئینی تھا وہ وزیراعلیٰ کیسے ہے؟ اس وضاحت کیلئے ہم سپریم کورٹ جا رہے ہیں۔

حکومت ختم کرتے کرتے اپنی گنتی پوری کرنے کے لالے پڑ گئے، مریم نواز

عمران خان نے کہا کہ عدالت نے 24 گھنٹے کا وقت دے دیا ہے الیکشن کیلئے، ہمارے 6 ممبر تو حج پر گئے ہوئے ہیں، اتنے کم وقت میں تو ہمارے راجن پور کے ممبران بھی نہیں پہنچ سکتے، یہ انتخاب صاف و شفاف نہیں ہو گا۔

چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان نے کہا کہ مخصوص نشستوں پر ہم الیکشن کمیشن کے پاس گئے ہیں، الیکشن کمیشن کو ان نشستوں پر ہمارے لوگوں کو نوٹیفائی کرنا چاہیے تھا، الیکشن کمیشن نے متنازعہ فیصلہ دیا جو قانون کے خلاف تھا، الیکشن کمیشن کے فیصلے پر ہم ہائیکورٹ گئے وہاں سے فیصلہ آگیا، الیکشن کمیشن نے ہائیکورٹ کے فیصلے کے باوجود نوٹیفکیشن جاری نہیں کیا۔

عمران خان کا لاہور ہائیکورٹ کے فیصلے کیخلاف سپریم کورٹ جانے کا اعلان

ہم نیوز کے مطابق چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان نے جاری کردہ ویڈیو بیان میں کہا کہ اب پنجاب میں 20 حلقوں میں ضمنی انتخابات ہونے جا رہے ہیں، اگر حمزہ شہباز ضمنی انتخابات کروائے گا تو وہ ان پر بھی اثر انداز ہو گا، حمزہ شہباز کے ہوتے ہوئے انتخابات صاف و شفاف نہیں ہو سکتے ہیں، لیگل ٹیم سے مشاورت کے بعد ہم کل صبح سپریم کورٹ جا رہے ہیں۔

متعلقہ خبریں