وفاقی اور صوبائی حکومتیں اپنی پالیسیوں پر نظر ثانی کریں، ایم کیو ایم

کراچی: ایم کیو ایم پاکستان کے رہنما وسیم اختر نے مطالبہ کیا ہے کہ وفاقی اور صوبائی حکومتیں اپنی پالیسیوں پر نظر ثانی کریں، ایم کیو ایم رابطہ کمیٹی مردم شماری پر آئندہ کا لائحہ عمل پیش کرے گی۔

ایم کیو ایم آج بھی وفاقی حکومت کیساتھ خریدوفروخت میں ملوث ہے، حافظ نعیم الرحمان

ہم نیوز کے مطابق اراکین رابطہ کمیٹی کے ہمراہ ایک مشترکہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے وسیم اختر نے کہا کہ ایم کیوایم ہمیشہ مظلوموں کے ساتھ کھڑی رہی ہے، مردم شماری میں ایم کیوایم کو اعتماد میں نہیں لیا گیا اور ایم کیو ایم کو نقصان پہنچایا گیا۔

انہوں نے کہا کہ بلدیاتی انتخابات سےمتعلق بھی عدالتی احکامات پرعمل درآمد ہونا چاہیے، کراچی اور حیدرآباد کی سرکاری نوکریوں پرمقامی لوگوں کا حق ہے لیکن جعلی ڈومیسائل پر یہاں کی نوکریاں دوسروں کو دی جارہی ہیں، ایم کیوایم کراچی سمیت پورے سندھ کے مسائل کو اجاگر کر رہی ہے۔

کراچی کے سابق میئر وسیم اختر نے کہا کہ ایم کیوایم سے جو لوگ چلے گئے تھے آج وہ واپس آئے ہیں، ایم کیوایم کو چھوڑنے والوں کی سیاست صفر ہے۔ انہوں نے کہا کہ کراچی میں چھوٹی چھوٹی جماعتیں بنائی گئی ہیں۔

بارش نے ایک بار پھر کراچی کے انفراسٹرکچر کی خامیوں کا پول کھول دیا،ایم کیو ایم رابطہ کمیٹی

ہم نیوز کے مطابق ایم کیو ایم پاکستان کے رہنما وسیم اختر نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ آصف زرداری اور مولانا فضل الرحمان کی گارنٹی پرمعاہدے پہ دستخط کیے، تحریک انصاف کے ساتھ معاہدہ کیا مگر انہوں نے بھی کوئی وعدہ وفا نہیں کیا۔

متعلقہ خبریں