امریکی صدر نے ٹوئٹر کو جھوٹا قرار دے دیا

واشنگٹن: امریکی صدر جوبائیڈن نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر کو جھوٹا قرار دے دیا۔

غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق امریکی صدر جوبائیڈن نے ٹوئٹر پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ ایلون مسک نے وہ کمپنی خریدی ہے جو دنیا بھر میں جھوٹ پھیلاتی ہے اور ان کا کوئی ایڈیٹر نہیں ہے اس لیے سچی خبر کی توقع بھی نہیں کی جا سکتی۔

انہوں نے کہا کہ ایلون مسک کو یہ معلوم ہی نہیں کہ ایک غلط خبر کے کیا اثرات مرتب ہو سکتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: ایلون مسلک کے حکم پر بھارت میں ٹوئٹر کے بیشتر ملازمین فارغ

دوسری جانب وائٹ ہاؤس کی پریس سیکرٹری نے کہا کہ امریکی صدر جوبائیڈن سوشل میڈیا کی اہمیت سے واقف ہیں اور وہ ٹوئٹر اور فیس بک وغیرہ کے پھیلاؤ کے حامی بھی ہیں۔

واضح رہے کہ جوبائیڈن اس وقت وسط مدتی انتخابات کی انتخابی مہم پر ہیں اور انہوں نے سوشل میڈیا پلیٹ فارم ٹوئٹر کے نئے مالک ایلون مسک کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے بڑی تعداد میں ملازمین کو نکالنے کی بھی مذمت کی۔

گزشتہ ماہ معروف امریکی کمپنی ٹیسلا اور اسپیس ایکس کے بانی ایلون مسک نے 44 ارب ڈالر میں سب سے زیادہ شیئر خرید کر ٹوئٹر کے باس بن گئے ہیں۔

متعلقہ خبریں