وزیراعظم کی جیفریز کو پاکستان میں دفتر کھولنے کی دعوت

وزیراعظم کی جیفریز کو پاکستان میں دفتر کھولنے کی دعوت

اسلام آباد: وزیرِ اعظم میاں شہباز شریف نے بین الاقوامی انویسٹمنٹ بینکنگ اینڈ کیپیٹل مارکیٹس فرم (جیفریز) کو پاکستان میں اپنا دفتر کھولنے کی دعوت دی ہے۔

پاکستان کا ڈیفالٹ رسک خطرناک سطح پر پہنچ گیا ہے، مفتاح اسماعیل

انہوں نے یہ دعوت جیفریز کے اعلیٰ سطحی وفد سے ملاقات کے دوران دی، اس موقع پر وفاقی وزیر خزانہ سینیٹر اسحاق ڈار بھی موجود تھے۔

پاکستان مسلم لیگ (ن) کے مرکزی صدر اور وزیراعظم میاں شہباز شریف نے وفد سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ
حکومت ملکی معیشت کو مستحکم کرنے کیلئے ہر ممکن اقدامات اٹھا رہی ہے، اتحادی حکومت کے مشکل فیصلوں سے ملک ڈیفالٹ کے خطرے سے نکل چکا۔

انہوں نے کہا کہ معاشی صورتحال پرغلط معلومات پھیلا کر بے بنیاد ہیجانی کیفیت پیدا کی جارہی ہے، ہم نے سیاسی قیمت کی پرواہ کئے بغیر ملک کو گزشتہ چار سال کی نااہلیوں کا خمیازہ بھگتنے سے بچایا ہے۔

وزیراعظم 4 سے 6ماہ میں ڈیلیور کریں گے، نگران حکومت آئی تو ملک ڈیفالٹ کر جائے گا،راناثنااللہ

وزیراعظم میاں شہباز شریف نے وفد سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ حکومت مہنگائی کم کرنے اورعوام کو ریلیف دینے کیلئے اقدامات اٹھا رہی ہے، بیرونی تجارتی خسارہ کم کرنے کیلئے کوشاں ہیں، پاکستان میں بیرونی سرمایہ کاروں کو ہر ممکن سہولتیں فراہم کر رہے ہیں۔

متعلقہ خبریں