عمران خان اسمبلیاں توڑنے کا رسک نہیں لیں گے، آئندہ بھی حکومت میں نہیں ہوں گے، گیلانی

عمران خان اسمبلیاں توڑنے کا رسک نہیں لیں گے، آئندہ بھی حکومت میں نہیں ہوں گے، گیلانی

لودھراں: پاکستان پیپلزپارٹی کے مرکزی رہنما اور سابق وزیر اعظم سینیٹر سید یوسف رضا گیلانی نے دعویٰ کیا ہے کہ عمران خان اسمبلیاں توڑنے کا رسک نہیں لیں گے، وہ بخوبی جانتے ہیں کہ اسمبلیاں ٹوٹیں تو صرف دو صوبوں میں الیکشن ہوں گے۔

جنرل باجوہ کو ایکسٹینشن دے کر بہت بڑی غلطی کی، عمران خان

انہوں نے ذرائع ابلاغ سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ عمران خان نے الیکشن کرانے کا ہمارا مطالبہ نہیں مانا تو ہم کیسے مانیں؟ عمران خان بات کرنا چاہتے ہیں تو غیر مشروط طور پر بیٹھیں تاکہ کوئی راستہ نکلے۔

سید یوسف رضا گیلانی نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ جو وزیراعلیٰ ایک ایف آئی آر درج نہیں کروا سکا وہ اسمبلی کیسے توڑے گا؟ عمران خان کا جھوٹ پر مبنی بیانیہ بے نقاب ہوچکا ہے، پی ٹی آئی نے پیپلزپارٹی اورن لیگ کے خلاف میڈیا ٹرائل کیا۔

جنرل باجوہ کے کہنے پر پی ٹی آئی کا ساتھ نہیں دیا، چودھری پرویز الٰہی

سابق وزیراعظم نے کہا کہ جب ان کی باری آئی ہے تو کہتے ہیں فوری الیکشن ہو جائیں، ہم نے چھوٹے چھوٹے کیسز میں 10،10 سال قید بھگتی ہیں، ان کے تو بڑے بڑے کیسز ہیں اس لیے خوفزدہ ہیں اور الیکشن چاہتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ عمران خان کی غلط فہمی ہے کہ الیکشن میں انہیں دو تہائی اکثریت ملے گی، ہماری اتحادی جماعتیں اپنے اپنے علاقوں میں بڑی با اثر ہیں۔

ایک بار ایکسٹینشن دی تھی، دوسری مرتبہ بات کیوں کی؟ ایک آدمی روز کہتا ہے مجھ سے غلطی ہوئی، سعد رفیق

یوسف رضا گیلانی نے ذرائع ابلاغ سے گفتگو کرتے ہوئے پوچھے جانے والے سوال کے جواب میں دعویٰ کیا کہ آئندہ بھی مخلوط حکومت بنے گی، عمران خان حکومت میں نہیں ہوں گے، وہ خود کہہ چکے ہیں کہ غداروں کے ساتھ نہیں بیٹھیں گے۔

متعلقہ خبریں