لاہور ہائیکورٹ کا اسکولوں اور کالجوں کی چھٹیاں بڑھانے کا حکم

لاہور ہائیکورٹ نے اسموگ کے تدارک کے لیےاسکولوں اور کالجوں کو مزید 7 روز بند کرنے کا حکم دے دیا۔

لاہور ہائیکورٹ میں اسموگ کے تدارک کے لیے درخواستوں پر سماعت  ہوئی۔لاہور ہائیکورٹ نے اسکولوں اور کالجوں کو مزید 7 روز بند کرنے کا حکم دے دیا۔

عدالت کی جانب سے ریمارکس میں کہا گیا ہے کہ شہر میں اسموگ کی وجہ سے چھٹیاں بڑھائی جائیں۔عدالت نے سیکریٹری تعلیم اور ہائر ایجوکیشن کمیشن کو نوٹیفکیشن جاری کرنے کی ہدایت کردی۔

جج نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا ہے کہ ہم نے اسموگ کو کافی حد تک کنٹرول کیا ہوا ہے۔اسموگ کی روک تھام حکومت کی ذمہ داری ہے۔

یہ بھی پڑھیں:سردیوں کی چھٹیاں 21 سے 31 دسمبر تک

وکیل پیمرا نے عدالت کو آگاہ کیا کہ سٹیلائٹ چینل پر اشتہارات کے لیے مالکان کو خطوط لکھ د یئے ہیں۔

عدالت نے ا سموگ کے خاتمے کے لیے کیمروں پر آنے والی لاگت کی رپورٹ طلب کر لی۔ کہا گیا ہے کہ  محکمہ زراعت تخمینہ لگا کر رپورٹ پیش کرے۔

عدالت نے اگلی سماعت پر پی ڈی ایم اے کے ڈی جی کو ریکارڈ سمیت طلب کر لیا۔ عدالت نے کمرہ عدالت میں موجود ڈی سی لاہور کو اپنے اختیارات استعمال کرنے کی ہدایت بھی کی۔

لاہور ہائیکورٹ کی جانب سے کہا گیا ہے کہ اسموگ کی روک تھام سے متعلق ہم قانون سازی کروا رہے ہیں۔اسموگ کے تدارک کے لیے بڑے شہروں میں انڈسٹریل ایریاز بنائے جائیں۔

عدالتی کمیشن نے کہا ہے کہ حکومت کو ماحولیات کے بارے ترجیحی بنیادوں پر کام کرنا چاہیے۔حکومت دانستہ رقم نہیں دے رہی۔

متعلقہ خبریں