نامورگلوکار منیر حسین کی 25 ویں برسی

نامور گلوکار منیر حسین کو مداحوں سے بچھڑے پچیس برس بیت گئے۔ گلوکارمنیرحسین کو موسیقار صفدر حسین نے فلمی دنیا میں متعارف کروایا جن کی فلم حاتم کے لیے انہوں نے اپنا فلمی’نغمہ تیرے محلوں کی چھائوں میں قرار اپنا لٹا بیٹھے‘ گایا۔

منیرحسین کے پہلے ہی نغمے نے انہیں شہرت کی بلندیوں تک پہنچا دیا۔ موسیقار رشید عطرے، خواجہ خورشید انور اور اے حمید نے ان کی آواز سے بھرپور فائدہ اٹھایا۔

منیر حسین کو اپنی پہلی ہی نغماتی فلم ’سات لاکھ‘ کے مشہور زمانہ سدا بہار گیت ’قرار لوٹنے والے تو پیار کو ترسے‘ سے مقبولیت ملی۔ یہ گیت سنتوش کمار پر فلمایا گیا تھا۔

نامور گلوکارطفیل نیازی کی30ویں برسی

وہ پاکستان کے پہلے گلوکار تھے جن کو بیک وقت اردو اور پنجابی فلموں میں کامیابی ملی تھی۔

انہوں نے اپنے38 سالہ فلمی کیرئیر میں عشق لیلیٰ، نوراں، ہیر، مکھڑا ، نیازمانہ، بودی شاہ، عالم آرا، بچہ جمورا، ناجی، جھومر، ساتھی ، شمع ، سوہنی کمہارن ، سچے موتی ، گلفام ، گلبدن، سلمی ، آنچل ، شہید ، اولاد، دامن ، چوڑیاں ، آشیانہ سمیت 225کے قریب فلمی گیت گائے۔

منیر حسین کے سگے ماموں رشید عطرے پاکستان کے عظیم ترین موسیقار تھے جبکہ ان کے خالہ زاد بھائی صفدر حسین بھی ایک اعلی پائے کے موسیقار جانے جاتے تھے۔ اپنے انداز کے اس منفرد گلوکار کا انتقال 27 ستمبر 1995 کو ہوا۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز