تجارت، خدمات، آمدن کا خسارہ ایک سال میں 29 فیصد کم ہوا، اسٹیٹ بینک

اسٹیٹ بینک کے ذخائر بھی ایک ارب 65 کروڑ ڈالر سے بڑھ کر 10 ارب 89 کروڑ ڈالر پر پہنچ گئے۔

پاکستان کے تجارتی خسارے میں 33 فیصد کمی

تجارتی خسارے میں کمی درآمدات میں 10 فیصد سے زیادہ تنزلی اور برآمدات میں تھوڑے سے اضافہ کے باعث ہوئی ہے۔

چار مہینوں میں 71 کروڑ 20 لاکھ ڈالر کی سرمایہ کاری ہوئی، ادارہ شماریات

گزشتہ سال اسی عرصے کے دوران تجارتی خسارہ گیارہ ارب ڈالر تھا جو اب کم ہوکر سات ارب ڈالر تک رہ گیا ہے۔

پاکستان کے تجارتی خسارے میں نمایاں کمی

رواں سال جولائی تا اکتوبر کے دوران تجارتی خسارے میں 35.5 فیصد کمی واقع ہوئی

پاکستان کے مرکزی بنک کی طرف سے ادائیگیوں کے توازن سے متعلق رپورٹ جاری

تین ماہ میں خدمات کا خسارہ ایک ارب بیس کروڑ ڈالر رہا۔ تین ماہ میں آمدن کا خسارہ ارب اڑتالیس کروڑ ڈالر رہا۔

معاشی منظر نامے کے لئے حوصلہ افزا خبر، تجارتی خسارہ 35فیصد کم ہوگیا

ادارہ شماریات کا کہناہے کہ مالی سال کے پہلے 3 ماہ میں تجارتی خسارہ 8 ارب 79 کروڑ ڈالر تھا،جولائی تا ستمبر برآمدات ( ایکسپورٹس) 3 فیصد بڑھ کر 5 ارب 52 کروڑ ڈالر رہیں۔

پاکستان کو اے ڈی بی نے 50 کروڑ ڈالرز قرض دینے کا اعلان کردیا

قرضہ پاکستان کی تجارت کے فروغ ،خسارے میں کمی اور معاشی اصلاحات (اکنامک ریفارمز) کے لیے دیا گیا ہے۔

مالی سال 2019: تجارتی اور کرنٹ اکاؤنٹ خسارے میں نمایاں کمی ہوئی، مرکزی بنک

اسٹیٹ بنک کی رپورٹ میں کہا گیاہے کہ مالی سال 2019 میں کرنٹ اکاؤنٹ خسارے میں 32 فیصد کی نمایاں کمی ریکارڈ کی گئی ہے۔

درآمدات میں چھ ارب ڈالر کمی ہوئی ہے، مشیر تجارت

گزشتہ سال 23 ارب ڈالر کی برآمدات رہی تھیں جب اس سال حکومت نے 24 ارب ڈالر کا ہدف مقرر کیا تھا، رزاق داؤد۔

آئی ایم ایف کی شرائط سے پہلے ہی بنیادی تبدیلیاں کی جا چکیں، اسد عمر

وزیر خزانہ اسد عمر  نے کہا ہے کہ آئی ایم ایف کے ساتھ پروگرام جلد مکمل ہو جائے گا، آئی

ٹاپ اسٹوریز