حکومت کا پیٹرول کی قیمت برقرار رکھنے کا فیصلہ

ڈیزل کی قیمت چار روپے اضافے کے بعد 105 روپے 43 پیسے مقرر کی گئی ہے۔

یکم ستمبر سے پیٹرول 7 روپے فی لیٹر مہنگا کرنے کی تجویز

اوگرا نے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کی تجاویز پٹرولیم ڈویژن کوبھجوا دی ہیں۔

پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں پھر کمی پر غور

چھبیس جون کو حکومت نے پیٹرول کی قیمت میں پچیس روپے فی لیٹر اضافہ کیا تھا جس پر عوام کی جانب سے شدید ردع عمل دیکھنے میں آیا

سستا پیٹرول کہاں گیا؟

زیرتوانائی عمرایوب نے بتایا کہ پاکستان میں پیٹرول کے10دن کےذخائرموجود ہیں

گراں فروشی اور قلت میں ملوث پیٹرول پمپ سیل کردیئےجائیں گے، اوگرا

وزارت توانائی، اوگرا اورایف آئی اے کی مشترکہ ٹیمیں انسپکشن کررہی ہیں

پیٹرول کتنا سستا ہوا؟

پاکستان تحریک انصاف کی حکومت نے 11 ماہ کے دوران پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کئی بار ردوبدل کیا ہے

کراچی سے خیبر تک پیٹرول کا بحران برقرار

کراچی، لاہور اور  پشاور سمیت ملک کے چھوٹے بڑے شہروں میں عوام پیٹرول کی تلاش میں دربدر ہیں

حکومت پیٹرول بحران پر قابو پانے میں تاحال ناکام، شہری پریشان

یکم جون سے پیٹرول کی نئی قیمت کا اطلاق ہوا تو ایک روز بعد ہی ملک کے بیشتر بڑے شہروں میں فلنگ اسٹیشنز پر فروخت بند کردی گئی

پیٹرول کی قلت پر 3 کمپنیوں کو شو کاز نوٹس جاری

ملک کے مختلف شہروں میں پیٹرول کا بحران تیسرے روز بھی جاری ہے اور شہری تیل کی تلاش میں خوار ہو رہے ہیں

پیٹرولیم مصنوعات مزید سستی ہونے کا امکان

پی ایس او ذرائع نے ہم نیوز کو بتایا کہ آئندہ ماہ سے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں مزید دس روپے فی لیٹر تک سستی ہوسکتی ہیں

ٹاپ اسٹوریز