بھارت کے ایک بار پھر پاکستان پر الزامات

بھارتی دفتر خارجہ نے الزام عائد کیا کہ بھارتی جاسوس کلبھوشن یادیو شدید دباؤ کے باعث پاکستانی الزامات تسلیم کر رہا ہے۔

پاکستان نے بھارت کو کلبھوشن یادیو تک قونصلر رسائی دے دی

کلبھوشن یادیو کو ویانا کنونشن، پاکستانی قوانین اور عالمی عدالت کے فیصلے کے تناظر میں قونصلر رسائی دی جا رہی ہے۔ ڈاکٹر فیصل

بھارت نے کلبھوشن یادیو تک قونصلر رسائی کا پہلا موقع گنوا دیا

سفارتی ذرائع کا کہناہے کہ پاکستان کی مخلصانہ پیشکش پر بھارت نے شرائط عائد کیں

دہشت گردی کے سوال پر فواد چوہدری کا کرارا جواب، بھارتی میڈیا سیخ پا

پاکستان نے دہشت گردوں کے خلاف کافی مؤثر کارروائی کی ہے کلبھوشن یادیو کی گرفتاری اس سلسلے میں بڑی کامیابی ہے

پاکستان نےکلبھوشن یادیو کو قونصلر رسائی دینےکا اعلان کردیا

ترجمان دفتر خارجہ کی طرف سے جاری اعلان میں کہا گیاہے کہ کلبھوشن یادیو کوعالمی عدالت انصاف کےفیصلےسےآگاہ کردیاگیا ہے۔

’کلبھوشن کیس پاکستانی قوانین کی روشنی میں آگے بڑھے گا‘

بھارتی جاسوس کو بے گناہ قرار دے کر رہا کرنے اور ہندوستان واپس نہ بھجوانے کا فیصلہ قابل تحسین ہے، وزیراعظم عمران خان

کلبھوشن یادیو کے ساتھ پاکستانی قوانین کے مطابق سلوک ہوگا، وزیر خارجہ

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہاہے کہ بھارتی جاسوس کلبھوشن یادیو کے ساتھ پاکستانی قوانین کے مطابق سلوک ہوگا،بھارت

’بھارتی درخواست کو ناقابل سماعت قرار دیا جانا چاہیے تھا‘

بھارتی جاسوس کلبھوشن یادیو کے فیصلے کے بعد دفتر خارجہ نے اعلامیہ جاری کر دیا۔

کلبھوشن یادیو کیس، پاکستان جیت گیا

کلبھوشن یادیو کو پاکستانی سیکیورٹی فورسز نے تین مارچ 2016 کو بلوچستان سے گرفتار کیا تھا۔

بھارتی جاسوسوں کی کہانی

کلبھوشن یادیو ایک ایسے وقت میں پاکستانی اداروں کے ہتھے چڑھا جب بھارت نے پاکستان پر دہشت گردی کو ہوا دینے کے الزامات کا طوفان کھڑا کیا ہوا تھا

ٹاپ اسٹوریز