شہزاد اکبر نے ایک بار پھر سرکاری خرچ پر جھوٹ بولا، طلال چوہدری

لاہور: پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رہنما اور سابق وزیر مملکت برئے داخلہ طلال چوہدری نے کہا ہے کہ وزیراعظم کے معاون خصوصی شہزاد اکبر نے ایک بار پھر سرکاری خرچ  پر قوم سے جھوٹ بول ہے۔

معاون خصوصی شہزاد اکبر کی پریس کانفرنس پر ردعمل دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ شہزاد اکبر پریس انفارمیشن ڈیپارٹمنٹ (پی آئی ڈی ) میں جھوٹے کاغذ لہراتے ہیں لیکن پارلیمان میں جواب اور عدالت میں ثبوت سے بھاگ جاتے ہیں ۔

طلال چودہری نے کہا کہ شہزاد اکبر کی کارکردگی کا پول آج  پارلیمنٹ میں حکومتی جواب سے کھل چکا ہے۔ پندرہ ماہ میں صفر برآمدگی ایسٹ ریکوری یونٹ کے جھوٹ کا پکا ثبوت ہے۔

انہوں نے کہا کہ عمران خان کنٹینر پر اور شہزاد اکبر پی آئی ڈی میں جھوٹ پر جھوٹ بول رہے ہیں۔ پی آئی ڈی میں ہلکان ہونے کے بجائے شہبازشریف کے خلاف ثبوت عدالت میں پیش کریں۔ شہزاد اکبر سیاسی انتقام کا ”ہامون جادوگر“ ہے۔

لیگی رہنما نے کہا کہ نالائق حکومت کے ”ہامون جادوگر“ اور ”بل بتوڑیاں“ صرف جھوٹ بولنے کی تنخواہ لے رہے ہیں۔ پارلیمنٹ میں جواب نہیں، عدالت میں ثبوت نہیں اور پی آئی ڈی میں سراسر جھوٹ بولا جارہا ہے۔ شہزاد اکبر کا جھوٹ قوم جان چکی ہے۔

انہوں نے کہا کہ سرکاری خرچ پر جھوٹ بولنے اور جھوٹے کاغذ لہرانے سے قوم کودھوکہ نہیں دیا جاسکتا ہے۔ شہزاد اکبر شہباز شریف کے خلاف الزامات کا ثبوت دنیا کی کسی عدالت میں دے دیں؟۔

یہ بھی پڑھیں: محکمہ اینٹی کرپشن نے 129 ارب روپے کی زمین واگزار کرائی، شہزاد اکبر

لیگی رہنما کا کہنا تھا کہ ایسٹ ریکوری کے ڈرامے پر آنے والا تمام خرچ شہزاد اکبر سے وصول کیا جائے۔ جھوٹ بولنے اور جھوٹے کاغذ  لہرانے سے آپ جھوٹے ہی رہیں گے۔

انہوں نے کہا کہ 200 ارب، 300 ارب اور 600 ارب کے جھوٹ کی ہانڈی بیچ چوراہے میں کب کی پھوٹ چکی ہے۔ کنٹینر پر جو جھوٹ بولے گئے، ان کا ثبوت کسی عدالت میں نہیں پیش نہیں کیا گیا۔

طلال چودہدری نے کہا کہ ایسٹ ریکوری یونٹ علیمہ باجی، جہانگیر ترین اور فیصل واڈا کی ناجائز جائیدادوں کی رقم واپس لے۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز